تھری جی اور فور جی ٹیکنا لوجی ہوئی پرانی۔۔۔


i

اسلام آباد: وزیر مملکت برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی اور ٹیلی مواصلات کی انوشہ رحمن نے کہا ہے کہ پاکستان فائیو جی ٹیکنالوجی کے استعمال کا تجربہ کرنے والا دنیا کا پہلا ملک بن جائے گا۔حکومت اس ٹیکنالوجی کے استعمال کی پلاننگ کرنے میں مصروف ہے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ایک انٹرویو دیتے ہوئے گفتگو کیا ۔ انہوں نے کہا کہ حکومت 2021 تک ملک میں فائیو جی متعارف کرانے کی تیاریاں شروع کررہی ہے اور پاکستان کے

لوگ تمام دیگر ایشیائی ممالک سے پہلے اس نئی ٹیکنالوجی کا استعمال شروع کردیں گے۔واضح رہے کہ فور جی سپیکٹرم لائسنس انتیس کروڑ پچاس لاکھ ڈالر میں فروخت کیا گیا ہے جبکہ چار سال کے دوران ملک میں براڈ بینڈ صارفین کی تعداد تین کروڑ ستر لاکھ سے بڑھ کر چار کروڑ چالیس لاکھ تک پہنچ گئی ہے اور اب فائیو جی نیٹ ورک کے آغاز کے بعد پوری صنعت کو مکمل طور پر ایک نئی شکل دینا شرو ع کر دی گئی ہے۔